آج کی آیت پر خیالات

جو آپ نے نہیں دیکھا کیا آپ اُس پر یقین رکھتے ہیں، یاں بالکل! یہ کس قسم کا سوال ہے؟ ہماری زندگیاں اُس پر منحصر ہیں جو ہم دیکھ نہیں سکتے—کششِ ثقل اور ہوا جس میں ہم سانس لیتے ہیں، یہ صرف دو نام ہیں۔ یسُوع میں ایمان اُتنا ہی فطری ہے جتنا کہ اِن چیزوں پر۔ مسئلہ یہ ہے کہ ہماری دل شک کرتے ہیں۔ ہمارے لیے اِس پر ایمان رکھنا مُشکل ہے کہ کوئی الہی ہمیں اِتنا پیار کرتا ہے۔ ہمارا تجربہ کہتا ہے، "یہ سچا ہونے کےلیے بہت ہی اچھا ہے" ہاں ہے"۔ یہ شک صرف اُس ردِعمل کی ایک دلچسپ صورت ہے جو خُدا ہم سے دیکھنا چاہتا ہے:ناقابلِ یقین اور شاندار خوشی۔" میں آپ کے بارے نہیں جانتا، لیکن میں نے دونوں کا مزہ چکھا ہ۔ میں شک پر خوشی کو ترجیح دیتا ہوں۔

میری دعا

میرا دل کتنی خوشی سے بھر جائے گا،جب مجھے یہ اندازہ ہوگا کہ میں اپنے آپ کو تیری حضوری میں محسوس کروںگا—اور تُجھے میری آنکھوں سے میرے آنسو صاف کرتے اور اُن سے میرا تعارف کرتا ہوا دیکھوں گا جن سے میں پیار کرتا ہوں اور اُن کے ساتھ جن کو میں صرف ساکھ کی وجہ سے جانتا ہوں۔ براہِ کرم مجھے اندازہ لگانے والی ایسی زندگی نہ دینا اور میرے دل میں سے اُمید کی کرن کو مدھم نہ کرنا، قطع نظر میرے زندگی میں یہاں جو کچھ بھی ہو۔ یسُوع کے نام میں مانگتا ہوں۔ آمین۔

آج کی آیت پر دعا اور خیالات فل وئیر لکھتے ہیں

اظہارِ خیال