آج کی آیت پر خیالات

جیسا کہ یوسف اور مریم نے خدا کی شاندار رحمت کا تجربہ کیا۔ یہ آیات ہمیں بنیاد فراہم کرتی ہیں: انہوں نے اپنے گھر سے جنوب کی طرف سفر کیا، وہ بیت الحم گئے جو کہ بادشاہ داؤد کا شہر تھا، اُن کی منگنی ہو چکی تھی لیکن ابھی ان کی شادی نہیں ہوئی تھی، مریم حاملہ تھی، اور وہ وہاں رومی حکومت میں اپنا نام درج کروانے جا رہے تھے۔ اس براہ راست اکاؤنٹ میں سازش اور شوشا پھوٹا۔ وعدہ اور اس کی ادائیگی کو مضوطی سے اس رشتے سے جوڑا گیا۔ طوفان کے درمیان تمام عقیدہ برباد ہوگیا۔ رومی مردم شماری میں تمام لوگوں کے لیے ایک حقیقی سیاق و سباق تیار ہوا۔ سازش، وعدے، عقیدے، اور تاریخ کا آپس میں ٹکراؤ ہوا۔ یسوع ہمارے درمیان آیا جہاں ہم اپنے آپ کو پاتے ہیں—امیدوں اور خوابوں سے بھری ہوئی جگہ جس میں مایوسی اور سازش بھی شامل تھی۔ وہ لوگوں کا مسیحا ہوگا۔ ہم تب سے یہ سب جانتے ہیں جب وہ پیدا بھی نہیں ہوا تھا۔ یہ بات ہمیں اس سے محبت کرنے اور تعریف کرنے پر مجبور کرتی ہے۔ خدا نے ہمارے جیسے بن کر اس دنیا میں آنے کا فیصلہ کیا، نہ کہ کچھ قدیم اور اجنبیوں کی طرح جو پہلے تھے۔ یہ وہ مسیح ہے جس تک ہم پہنچ سکتے ہیں اور جس کی پیروی کر سکتے ہیں۔ یہ یسوع ہم میں سے ایک ہے۔

Thoughts on Today's Verse...

For the next few days, let's journey with Joseph and Mary as they experience the incredible grace of God. These verses give us the basics: they took a trip south from their home, they went to Bethlehem which was King David's city, they were "betrothed" or pledged in marriage but not yet fully married, Mary was pregnant, and they were going there to register with the Roman government. Intrigue and scandal ripple between the lines of this straightforward account. Promise and fulfillment are strongly suggested with the connection. Faithfulness through the midst of storm is demonstrated. A real historical context for everyday people is made with the presence of a Roman census. Scandal, promise, faithfulness, and history collide. Jesus enters our world very much in a place where we find ourselves — a place of hope and dreams marred by scandal and disappointment. He will be a people's Messiah. We know it before he is even born. It makes us love him and appreciate him more. God has chosen to enter our world as one of us, not as some pristine and untouched alien from beyond. This is a Messiah we can reach and follow. This Jesus is one of us.

میری دعا

مقدس اور پیار کرنے والے خُدا، یسوع کے تحفے کے لیے شکریہ۔ شکریہ کہ وہ ہماری گندی دنیا میں تمام تنازعات، طعنوں اور مخالفتوں کے ساتھ داخل ہوا۔ شکریہ کہ تُو ہماری جدوجہد سے الگ نہیں رہا۔ یسوع کے لیے شکریہ ، جس کے نام پہ میں مانگتا ہوں۔ آمین۔

My Prayer...

Holy and loving God, thank you for the gift of Jesus. Thank you that he entered our messy world with all its contradictions, ironies, and conflicts. Thank you for not being aloof or immune to our struggles. Thank you for Jesus, in whose name I pray. Amen.

آج کی آیت پر دعا اور خیالات فل وئیر لکھتے ہیں

Today's Verse Illustrated


Inspirational illustration of لوقا ۲ باب ۴ تا ۵ آیت

اظہارِ خیال