آج کی آیت پر خیالات

خدا کی عظمت کے لیے آپ کے کیا عظیم "بادشاہی خواب ہیں"؟ کیا شاندار منصوبہ ہے کیا آپ یہ تصور کر سکتے ہیں کہ خدا سے خوشی کی دعا کی جاسکتی ہے؟ خدا کے ساتھ فردوس میں آپ کی کیا توقعات ہیں؟ جب کہ تم نے اپنے دماغ پر بوجھ ڈالا ہے، اپنے تصور کو للکارا ہے ، اور اپنی توقعات کا ذخیرہ کیا ہے، کیا آپ اس سچ کے لیے تیار ہیں جو سیدھا آسمان سے زمین پر صادر ہوگا؟ خدا وہ سب کرنے کے قابل ہے جو کوئی نہیں کر سکتا۔ خدا کی طاقت ہمارے کام میں ظاہر ہوتی ہے کہ ہم اس کی شاندار مرضی کو پورا کریں اور اس کے ابدی مقصد کی تکمیل کریں۔ چنانچہ آئیں ہم اپنی توقعات کو اتنا کم اور اپنی نطر کو اتنا محدود نہ رکھیں۔ اُس کی عظمت کے ساتھ زندگی بسر کریں اور اپنی زندگی میں اُس کے دوران اس کی عظمت کی توقع رکھیں۔

Thoughts on Today's Verse...

What grand "Kingdom dreams" do you have for God's glory? What incredible ideas can you imagine requesting that God would bring to fruition? What are your expectations of heaven with God? Now that you have stretched mind, challenged your imagination, and loaded up your expectations, are you ready for some down to earth truth straight from the Marvel of heaven? God is able to do far more than any of that. His power is at work in us to do his glorious will and accomplish his eternal purposes. So let's not set our sights too low and expect too little. Live for his glory and expect to see it at work in your life.

میری دعا

اے آقا، آسمان و زمین کے خدا، میرے ابا باپ اور پیار کرنے والے چوپان، میری سوچوں کو اپنی روح کے ذریعے فعال بنا تاکہ وہ بڑے خواب دیکھ سکے اور بڑی امیدیں کرے تب زمینی خواہشات والا اور خود غرض دماغ تصور کر سکے۔ مجھے حیرت اور توقع کی حس عنایت فرما تاکہ میں تیری عظمت میں زندگی بسر کروں۔ یسوع کے نام میں مانگتا ہوں۔ آمین۔

My Prayer...

O LORD, God of heavens and earth, my Abba Father and loving Shepherd, please stir my thoughts by your Spirit to dream bigger dreams and have higher hopes than my earthbound and selfish brain can imagine. Give me a sense of wonder and expectation as I live for your glory. In Jesus name I pray. Amen.

آج کی آیت پر دعا اور خیالات فل وئیر لکھتے ہیں

Today's Verse Illustrated


Inspirational illustration of افسیوں 3 باب 20 تا 21 آیت

اظہارِ خیال